پاکستان اور سری لنکا میچ کے باعث 50 سے زائد شاہراہوں کے بند ہونے پر شہری نے لاہور ہائیکورٹ میں درخواست دائر کر دی

لاہور: پاکستان اور سری لنکا میچ کے باعث 50 سے زائد شاہراہوں کے بند ہونے پر شہری نے لاہور ہائیکورٹ میں درخواست دائر کر دی۔ شہری نے مؤقف اختیار کیا ہے کہ 50شاہراہیں بند کرنے کے بجائے ٹیموں کو ہیلی کاپٹر کے ذریعے اسٹڈیم تک پہنچا دیا جائے تو کروڑوں روپے کی بچت ہوگی۔ایک شہری کی جانب سے لاہور ہائیکورٹ میں دائر درخواست میں وفاقی حکومت، پنجاب حکومت ،پی سی بی سمیت دیگر کو فریق بنایا گیا ہے ۔ درخواست گزار نے مؤقف اختیار کیا ہے کہ پاکستانی اورسری لنکن ٹیم کو اگر ہیلی کاپٹر کے ذریعے اسٹیڈیم پہنچا دیا جائے تو تمام مسائل حل ہو سکتے ہیں،میچ کے باعث 50 شاہراہیں بند ہیں جس سے تاجر، شہری مریض سب پریشان ہیں۔درخواست میں مؤقف اختیار کیا گیاہے کہ مال روڈ سمیت اہم شاہراہیں بند ہونے سے روزانہ کرڑوں روپے کا نقصان ہو رہا ہے،نجی ہوٹل سے لے کر اسٹیڈیم تک سیکیورٹی پر قومی خزانے سے کروڑوں روپیخرچ کیے جا رہے ہیں۔درخواست گزار کے مطابق راستوں میں جنریٹر، لائٹنگ سمیت دیگر انتظامات، پر بھی کروڑوں روپیخرچ ہو رہے ہیں،اگر ٹیموں کو ہیلی کاپٹر کے ذریعے گرؤانڈ میں پہنچا دیا جائے تو بہت زیادہ بچت کی جا سکتی ہے۔ ہیلی کاپٹر سے گرؤانڈ تک پہنچانے سے ٹیمیں جلد اور محفوظ پہنچ سکتی ہیں۔عدالت وفاقی حکومت، پی سی بی سمیت متعلقہ حکام کو ہیلی کاپٹر پر ٹیموں کو گراؤنڈ تک پہنچانے کے احکامات جاری کرے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں