6 سے 7 ہزار کرونا کیسز مزید رپورٹ ہونے کا خدشہ ہے،ڈاکٹر عطاالرحمان

کراچی (آئی این پی ) معروف سائنس دان اور انفارمیشن ٹیکنالوجی ٹاسک فورس کے کو چیئرمین ڈاکٹرعطا الرحمان نے کہا ہے کہ میرا اندازہ ہے کہ 6 سے 7 ہزار کرونا کیس اور رپورٹ ہوں گے۔ نجی ٹی وی گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر عطاالرحمان نے کہا کہ اگلے 2 ماہ اپریل اور مئی کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے حوالے سے خاصے اہم ہیں، ان مہینوں میں وائرس کے پھیلنے کا خدشہ زیادہ ہے۔ڈاکٹر عطاالرحمان کا کہنا تھا کہ چھ سے سات ہزار مزید کیسز آ سکتے ہیں، انتہا پر پہنچ کر کرونا وائرس کا پھیلاؤ گھٹنا شروع ہو سکتا ہے، ہماری صورت حال یورپی ممالک سے کافی بہتر ہے، کووڈ 19 کا اسٹرکچر پتا چل جائے تو دوا کی طرف بڑھ سکتے ہیں، وقت کے ساتھ واضح ہوگا کہ کرونا کے لیے کون سی دوائیں آزمودہ ہیں۔انھوں نے لاک ڈاؤن کے حوالے سے بھی مشورہ دیا کہ لاک ڈاؤن میں نرمی بھی ضروری ہے ورنہ لوگ بھوک سے مر جائیں گے، لاک ڈاؤن سے کیسز تو کم ہوں گے لیکن افراتفری مچ جائے گی، لاک ڈاؤن مخصوص کرنا پڑے گا، کچھ صنعتیں مشروط کھولی جا سکتی ہیں، ایسا لاک ڈاؤن ہو کہ لوگ اپنی روزی کما سکیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں