کوئٹہ کسٹم کی کارروائی، 28ہزار لیٹرایرانی ڈیزل اور غیر ملکی سامان برآمد

کو ئٹہ: کوئٹہ کسٹم نے سوراب کے قریب کارروائی کرتے ہوئے 28ہزار لیٹرایرانی ڈیزل اور غیر ملکی سامان برآمدکرکے قبضے میں لے لیاہے ۔کسٹمز ذرائع کے مطابق گزشتہ روز کسٹم حکام نے سوراب کے مقام پر کارروائی کرتے ہوئے بڑے پیمانے پر غیر ملکی سامان جن میں ٹائلز ،ایرانی ساخت خمیرہ اور پٹرول برآمد کی اس کے علاوہ ایک اورکارروائی میں ایک آئل ٹینکر سے 28000ہزار لیٹر ڈیزل برآمد کرکے ٹینکر کو قبضے میں لیا گیا۔ جبکہ سوراب اور خضدار کے اطراف میں واقعی غیر قانونی پٹرول پمپز پر چھاپو کا سلسلہ بھی شروع ہو چکا ہے اور اب تک 12000 ہزار ڈیزل پٹرول برآمد کرکے کئی پمپز کو ناکارہ بھی بنا گیا ہے کارروائی میں انسپکٹر نصیر شاہین اور انسپکٹر احمد زہری نے بمعہ اسٹاف کے حصہ لیا ہے برآمد شدہ سامان کی قیمت ایک کڑور روپے کے قریب بتای جاتی ہیہے واضع رہے زیادہ تر کارروائی خفیہ اطلاع پر کی جا تی ہے کیو نکہ مصروف روٹ کی وجہ سے ہر گاڑی کی چیکنگ تقریباََ ناممکن ہوتی ہے بلیلی کسٹمز چیک پوسٹ پر بھی سپرنٹنڈنٹ سلیم آغا ، انسپکٹر جمیل کا کڑ اور اصغر کاکڑ اور محمد طفیل نے پچھلے دنوںکے دوران مختلف کارروائیوںمیں ایک عدد نان کسٹمز پیڈ منی کوچ جس میں لیڈیز جرسیاں صابن وغیرہ برآمد تھی کوقبضے میں لے لیا ۔ اس کے ساتھ ساتھ بڑے پیمانے پر ایک اور کارروائی میں سپر کاپر ، ٹائرز کمبلز پلاسٹک پائپز لیڈیز کپڑے سمر سیبلز وغیرہ شامل تھے بھی قبضے میں لے کیا گیاجن کی قیمت کروڑ روپے سے زائد بتائی جانے ہے ۔شیلا باغ کسٹم چیک پوسٹ بند ہونے کی وجہ سے اسمگلنگ کا زور اب بلیلی کی طرف زیادہ ہے ۔ چیف کلکٹر ڈاکٹر چودھری ذوالفقار علی ، کلکٹر پریوینٹو اور ایڈیشنل کلکٹر ز ڈپٹی اور اسسٹنٹ کلکٹرز نے اسٹاف کی کارروائی کو سراہا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں