اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوئیٹرس کا مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر تشویش کا اظہار

نیویارک (این این آئی)اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوئیٹرس نے مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے فریقین کو کشیدگی سے بچنے اور تمام تصفیہ طلب امور مذاکرات کے ذریعے حل کرنے کی ضرورت پر زور دیا ہے جبکہ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہاہے کہ خطہ کسی نئی محاذ آرائی کا متحمل نہیں ہوسکتا ،تناؤ کی کیفیت پر قابو پانے کیلئے اقوام متحدہ اپنے چارٹر کی رو سے اہم کردار ادا کر سکتا ہے،تمام فریقین کو کشیدگی میں کمی لانے اور معاملات کو پر امن طریقے سے حل کرنے کیلئے،سیاسی و سفارتی ذرائع بروئے کار لانے پر آمادہ کیا جائے ،پاکستان ،خطے میں کسی محاذ آرائی کا حصہ دار نہیں بنے گا ، قیام امن کیلئے پاکستان اپنا متحرک اور مثبت کردار ادا کرنے کیلئے پر عزم ہے،بھارت کی جانب سے مقبوضہ جموں و کشمیر میں جاری انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیاں انتہائی تشویشناک ہیں ۔وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے نیویارک میں اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل ’’انتونیو گوئٹرس‘‘سے ملاقات کی جس میں اقوام متحدہ میں پاکستان کے مستقل مندوب ایمبسڈر منیر اکرم بھی اس ملاقات میں موجود تھے۔دوران ملاقات مشرق_وسطی کی صورتحال ،بھارت کی جانب سے مقبوضہ جموں و کشمیر میں جاری انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں سمیت خطے میں امن و امان کی مجموعی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔وزیر خارجہ نے سیکرٹری جنرل اقوام متحدہ کو مشرق وسطیٰ میں کشیدگی کم کروانے کیلئے پاکستان کی سفارتی کاوشوں سے آگاہ کیا۔وزیر خارجہ نے سیکرٹری جنرل اقوام متحدہ کو، وزیر اعظم عمران خان کی خصوصی ہدایت پر کیے گئے، اپنے حالیہ دورہ ایران و سعودی عرب کی تفصیلات سے آگاہ کیا۔ وزیر خارجہ نے کہاکہپاکستان یہ سمجھتا ہے کہ یہ خطہ کسی نئی محاذ آرائی کا متحمل نہیں ہو سکتا ،ضرورت اس امر کی ہے کہ تمام فریقین کو کشیدگی میں کمی لانے اور معاملات کو پر امن طریقے سے حل کرنے کیلئے،سیاسی و سفارتی ذرائع بروئے کار لانے پر آمادہ کیا جائے ۔ وزیر خارجہ نے کہاکہ ہم سمجھتے ہیں کہ اس تناؤ کی کیفیت پر قابو پانے کیلئے اقوام متحدہ اپنے چارٹر کی رو سے اہم کردار ادا کر سکتا ہے ۔وزیر خارجہ نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ پاکستان ،خطے میں کسی محاذ آرائی کا حصہ دار نہیں بنے گا لیکن قیام امن کیلئے پاکستان اپنا متحرک اور مثبت کردار ادا کرنے کیلئے پر عزم ہے۔یو این سیکرٹری جنرل انتونیو گوئیٹرس نے قیام امن کیلئے پاکستان کے مثبت کردار کو سراہتے ہوئے تمام فریقین کو کشیدگی میں کمی لانے اور معاملات کو افہام و تفہیم سے حل کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔ وزیر خارجہ نے کہاکہ بھارت کی جانب سے مقبوضہ جموں و کشمیر میں جاری انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیاں انتہائی تشویشناک ہیں ۔ وزیر خارجہ نے کہاکہ مقبوضہ جموں و کشمیر کے 80لاکھ معصوم کشمیری ، 5اگست سے مسلسل، لامتناہی کرفیو کا سامنا کر رہے ہیں ۔مخدوم شاہ محمود قریشی نے کہاکہ ذرائع ابلاغ پر مکمل پابندی اور کمیونیکیشن بلیک آؤٹ کے ذریعے حقائق کو دنیا کی نظروں سے اوجھل رکھنے کی کوشش کی جا رہی ہے ۔مخدوم شاہ محمود قریشی نے کہاکہ ضرورت اس امر کی ہے کہ اقوام متحدہ اور عالمی برادری معصوم کشمیریوں کو بھارتی جبرواستبداد سے نجات دلانے کیلئے،نتیجہ خیز اقدام اٹھائے ۔وزیر خارجہ نے ، 5 اگست کے بھارتی اقدام کے بعد پاکستان اور چین کی خصوصی درخواست پر ،پانچ ماہ کے عرصے کے دوران، سلامتی کونسل کے تین اجلاسوں کے انعقاد کو خوش آئند قرار دیتے ہوئے، سیکریٹری جنرل انتونیو گوئیٹرس کا شکریہ ادا کیا۔اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انتونیو گوئیٹرس نے انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے فریقین کو کشیدگی سے بچنے اور تمام تصفیہ طلب امور مذاکرات کے ذریعے حل کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں