حکومت پاکستان کو مدینے جیسی فلاحی ریاست بنانے کے لیے کوشاں ہے،شاہ محمود قریشی

ملتان:  وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہاہے کہ موجودہ حکومت پاکستان کو ریاستِ مدینہ جیسی فلاحی ریاست بنانے کے لیے کوشاں ہے، صحت انصاف کارڈ اور احساس پروگرام فلاحی ریاست کی طرف پیش قدمی ہے۔تفصیلات کے مطابق ملتان میں وزیرخارجہ شاہ محمود کا سیرت النبیؐکانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ میرااولین ایجنڈا ملک وملت کی خدمت ہے، وزیراعظم عمران خان مدینے جیسی ریاست قائم کرنے کے لیے محنت کررہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ حضوؐ کی زندگی کے مختلف پہلوں سے رہنمائی تلاش کرنی ہے، حضرت محمدؐ نے ایک فلاحی اور رفاہی ریاست قائم کی، ہماری حکومت بھی ایسی ہی ریاست قائم کرنا چاہتی ہے۔شاہ محمود قریشی کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان کو بہت بڑے امتحان درپیش ہیں، وطن عزیز کو بڑی آزمائشوں کا سامنا ہے، حکومت کو ایک سال میں عالمی سطح پر بہت کامیابیاں ملی ہیں۔خیال رہے کہ عید میلاد النبیؐ کے موقع پر بھی وزیراعظم نے مدینے جیسی ریاست کے قیام کیلئے جدوجہد جاری رکھنے کے عزم کا اظہار کیا تھا۔ ان کا کہنا تھا کہ ملک میں محبت، امن اور ہم آہنگی کی فضا پیدا کرنے کے لیے محسن انسانیت حضرت محمدؐ کی سیرت طیبہ پرعمل کی اہمیت واضح کی۔وزیراعظم نے کہا تھا کہ پیغمبر اسلام ؐ کی زندگی اپنے اندر اعلی اخلاق کی دنیا لیے ہوئے ہے، آپؐ نے مثالی فلاحی ریاست اور رول ماڈل معاشرہ قائم کیا، ریاست مدینہ میں سب کے حقوق مساوی تھے اور تمام مذاہب کے ماننے والوں کو مذہبی عقائد کے مطابق عبادت کی آزادی تھی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں