حکومت فیصلہ کر چکی ،تمام سازشوں کے باجود صفائی کے کام کو مکمل کریں گے ،مرتضیٰ وہاب

کراچی  ترجمان وزیر اعلیٰ سندھ مرتضیٰ وہاب نے کہا ہے کہ حکومت فیصلہ کر چکی ہے اورتمام سازشوں کے باجود صفائی کے کام کو مکمل کریں گے ،سندھ حکومت کوشش کرے گی کہ صفائی کے کام میں اپنے تمام سٹیک ہولڈرز کو لے کر آگے بڑھیں ، آپ نے کچرا سڑکوں اور پارکوں میں پھینک دیا ہے جس کی وجہ سے کراچی کے لوگ مشکلات کا سامنا کر رہے ہیں ،کراچی کے بیک لاک کو آئندہ 30 روز میں کلیئر کریں گے ،پیر کے روز ترجمان وزیر اعلیٰ سندھ مرتضیٰ وہاب نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ میں ان اداروں سے درخواست کرتا ہوں کہ خدا کا واسطہ ہے سندھ حکومت کے کام میں رکاوٹ نہ بنیں، سندھ حکومت کراچی کی خدمت کرنا چاہتی ہے ،سندھ حکومت کراچی کے مسائل کو حل کرنے کیلئے وزیر اعلیٰ سندھ کی سربراہی میں میدان میں اتری ہے ، آپ لوگ کراچی کے مسائل کو حل کرنے کی کوشش نہیں کررہے بلکہ ہمارے کام میں روائتی طور پر اثر انداز ہونے کی کوشش کررہے ہیں ،میری ان شر پسند عناصر سے گزارش ہے کہ اپنی تمام سازشیں بند کریں کیونکہ سندھ حکومت فیصلہ کر چکی ہے کہ وہ صفائی کے کام کو جاری رکھے گی ، سندھ حکومت کوشش کرے گی کہ وہ صفائی کے کام میں اپنے تمام سٹیک ہولڈرز کو ساتھ لے کر آگے بڑھے ، میں یہ واضح طور پر بتا دوں کہ سندھ حکومت اکیلے کام نہیں کر رہی، میں ایسے لوگوں کا شکر گزار ہوں جو ا پنی سیاسی وابستگی سے بالا تر ہو کر کراچی میں صفائی کی نیت سے کام کر رہے ہیں ، جب وزیر اعلیٰ سندھ ہفتے کے روز ڈی ایم سی کے دورے پر گئے تو ریحان ہاشمی ذاتی طور پر وہاں موجود تھے ، انہوں نے وزیر اعلیٰ سندھ کو یقین دہانی کرائی کہ اس کام میں ہم آپ کے ساتھ ہیں ،تمام لوگوں کا شکر گزار ہوں جو کراچی میں صفائی کے کام کو مکمل کرنے میں ساتھ دے رہی ہیں اور کراچی والوں کے مسائل حل کرنے کی کوشش کر رہے ہیں ،تنقید کرنے والوں کو کہنا چاہتا ہوں کہ یہ آپ سے کام نہیں ہو پائے گا آپ نے کچرا نکال کر پارکوں اور سڑکوں میں پھینک دیا ہے جس کا نتیجہ کراچی کے لوگوں کو ان مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہاہے ، آپ باتوں کے علاوہ کچھ نہیں کر سکتے جو لوگ کام کر رہے ہیں ان کو کام کرنے دیں ،اگر آپ کام نہیں کر سکتے تو بلا وجہ کراچی والوں کو نقصان نہ پہنچائیں ،ہم کراچی کے بیک لاک کو آئندہ30 روز میں کلئیر کریں گے کوئی بھی حکومت فیصلہ کیوں نہ کر لے وہ پبلک سپورٹ کے بغیر کامیاب نہیں ہو سکتی ، میں سمجھتا ہوں کہ حکومتی ادارے صفائی کے کام کو مکمل کرے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں